ریاض: معروف مسلم مبلغ،اسکالر اور مقرر ڈاکٹر ذاکر نائیک کو سعودی عرب کے شاہ سلمان کی جانب سے شہریت دئے جانے کے متعلق رپورٹس سامنے آئی ہیں۔

چند برس قبل بنگلہ دیش میں ہوئے دہشتگردی کے واقعہ میں ملوث افراد میں سے ایک کی فیس بک وال پر ڈاکٹر ذاکر نائیک کی ویڈیو شئیر ہوئی دیکھ کر بھارتی ایجنسیوں کے عتاب کا نشانہ بننے والے ذاکر نائیک طویل عرصہ سے ملک سے باہر ہیں۔ اس دوران انڈیا میں ان کے والد کا انتقال ہوا تاہم بھارتی اداروں نے ایسے حالات بنائے رکھے کہ وہ جنازے میں شریک نہ ہو سکے۔

مڈل ایسٹ مانیٹر کی رپورٹ کے مطابق ڈاکٹر ذاکر نائیک کو سعودی شاہ کی جانب سے شہریت اس لئے دی گئی ہے تاکہ انہیں بھارتی ایماء پر انٹرپول کے ہاتھوں گرفتار ہونے سے بچایا جا سکے۔

اکیاون سالہ مسلم اسکالر بھارت میں اسلامک ریسرچ فاؤنڈیشن کے بانی ہیں جس کا مقصد مکالمے اور دلیل کے ذریعے اسلام کی حقانیت لوگوں کے سامنے واضح کرنا ہے۔

اعتدال پسند مسلم اسکالر کے طور پر پہچانے جانے والے ذاکر نائیک کے ادارے کے تحت پیس ٹی وی کے نام سے ٹی وی چینل بھی انگریزی اور اردو زبانوں میں فعال ہے۔ مسلم ممالک ہی نہیں دنیا کے بیشتر غیرمسلم ممالک میں مقبول ٹی وی چینل پر برطانیہ،کینیڈا اور بنگلہ دیش نے پابندی عائد کر رکھی ہے۔

قبل ازیں سامنے آنے والی رپورٹس میں یہ بھی کہا گیا تھا کہ بھارتی حکام ڈاکٹر ذاکر نائیک کا پاسپورٹ منسوخ کرنے کا ارادہ بھی ظاہر کر چکے ہیں تاکہ انہیں مجبورا ملک واپس آنا پڑے۔

Subscribe for our email updates…

Email

Raah Tv Live

About Raah TV

Raah TV is a Pakistani infotainment web channel with a vision to promote positivity, optimism and hope.